Subscribe:

Monday, June 13, 2011

مجرمین کی نشاندہی : بنیادی ضرورت اور کام کا خاکہ



مجرمین کی نشاندہی : دوسرا حصہ 
الحمدللہ والصلوۃ والسلام علی رسول اللہ

مجرمین کی نشاندہی کرنے اور فہرستیں ترتیب دینے والا مضمون پوسٹ کرنے کا اصل مقصد یہی تھا کہ مجاہدین اور ان سے متعلق  افراد کو اس اہم کام کی طرف بھی توجہ دلائی جائے ۔ لیکن اسے بہتر طور پر انجام دینے اور اس طرف مزید توجہ دلانے کے لیے ضروری تھا کہ بعض بنیادی اہداف اور ضرورتوں کا ایک خاکہ پیش کر دیا جائے تاکہ یہ کام کرنے والے افراد اسی خاکہ کے مطابق کام کا تعین کریں اور اپنی توانائیاں اور وقت بے مقصد ضائع کرنے سے بچ جائیں ۔
ابتدا ہی میں کچھ ساتھیوں کی طرف سے ہمیں مشورہ دیا گیا تھا کہ مجرمین کو بے نقاب کرنے والے کام کی کچھ تفصیلات بھی پیش کی جائیں تاکہ ساتھیوں کو اہداف متعین کرنے میں آسانی ہو ۔ لیکن ہم اس کی اہمیت کو جاننے کے باوجود اس کام میں پیش رفت کرنے سے بعض وجوہات کی بنا پر کتراتے رہے ہیں جن میں سے ایک سیکیورٹی کا ایشو بھی شامل ہے ۔ لیکن اب نہ صرف ایسی ای میل موصول ہونا شروع ہوئیں جن میں ہم سے ترصد کرنے کے متعلق تفصیلات پوچھی جاتی ہیں مثلا کون کون سے افراد اور ادارے مجاہدین کا ہدف ہیں یا کون کون ترجیح میں شامل ہیں ، بلکہ  بعض افراد کی طرف سے از خود چند مجرمین کی نشاندہی کر کے ہمیں ارسال بھی کی گئی ہے ۔ چنانچہ  اللہ سبحانہ وتعالیٰ کے بھروسے پر ہم اس کام کا آغاز کر رہے ہیں ۔ ہم دعا کرتے ہیں کہ اللہ تعالیٰ ہمارے اس کام میں برکت ڈالیں ، ہماری ان کاوشوں کو قبول فرمائیں ہمیں دنیا اور آخرت میں اس کا نفع سمیٹنے کا موقع بھی عطا فرمائیں ۔

اول :::
اس سلسلے کی سب سے پہلی ضرورت ہمارا آپ سے خفیہ اور قابل اعتماد رابطہ ہے ، اور اس کے لیے اسرار المجاہدین کا استعمال ضروری ہے ۔ غزوۃ الہند بلاگ پر آپ کو اسرار المجاہدین کا ربط فراہم کیا گیا ہے ۔ اسرار المجاہدین کے ذریعے پیغام کو انکرپٹ کیے بغیر اس نوعیت کا کوئی پیغام ہمیں بھیجا گیا تو وہ دشمن کی نظر میں آسکتا ہے اور دشمن اس ہدف کے خلاف پہلے سے ہی حفاظتی اقدام کر لے گا اس لیے مجاہدین ایسے کسی ہدف کو نشانہ نہیں بنائیں گے ۔ اور آپ کی ساری محنت ضائع ہوجائے گی ۔ اس لیے اس بات کا خیال رکھیں کہ ہمیں معلومات کے حصول کی جلدی نہیں ۔ اگر آپ کے پاس مجرمین کے متعلق کوئی بھی معلومات ہیں تو انہیں اپنے پاس محفوظ  رکھیں اور ہمیں اس وقت تک نہ بھیجیں جب تک آپ اسرار المجاہدین کا استعمال نہ سیکھ لیں ۔ ہمیں افسوس ہے کہ ہم ابھی تک اسرار المجاہدین کے استعمال کے بارے میں رہنمائی فراہم نہیں کر سکے ہیں انشاء اللہ جلد ہی ہم اس کے بارے میں مکمل رہنمائی فراہم کرنے کی کوشش کریں گے ۔

دوم :::
یاد رکھیں کہ مجاہدین شریعت سے رائے لیے بغیر کسی فرد یا ادارے کو ہدف نہیں بناتے ۔ اس لیے فہرستیں بناتے ہوئے اس بات کو پیش نظر رکھیں اور صرف ان مجرمین کی نشاندہی کریں جن کے بارے میں آپ کو یقین ہو کہ مجاہدین کے علماء کی عام رائے ان کے متعلق یہی ہے ، یا اگر آپ کو تشویش ہو تو پہلے علماء کی رائے معلوم کرکے اطمینان کر لیں ۔

سوم :::
فہرستیں ترتیب دینا اس کام کا صرف ایک پہلو ہے  ، اور کسی مجرم کے بارے میں تفصیلی معلومات فراہم کرنا اس کام کا ضمیمہ یا تتمہ ہے ۔ ہماری خواہش ہے کہ اگر آپ کسی مجرم کو جانتے ہیں تو آپ اس مجرم کے متعلق ضروری تفصیلات بھی فراہم کریں ۔ مثلا نام ، پتے ، رابطہ نمبر ، اس کے دوست ، رشتہ دار ، آنے جانے یا راستوں کی تفصیلات کے علاوہ تصویر یا کوئی خفیہ ویڈیو اگر ہو تو ۔۔۔ وغیرہ وغیرہ

چہارم :::
یہ کام آپ اکیلے رہ کر بھی کر سکتے ہیں  اس لیے بہتر ہے کہ آپ اپنے خیالات کو کسی پر ظاہر نہ ہونے دیں ۔آپ جس مجرم کے متعلق اطلاع فراہم کر رہے ہیں اس کے متعلق تفتیش کے دوران  ادنیٰ سی کڑی نقصان کا باعث بن سکتی ہے ۔اگر بظاہر کوئی خطرہ نہیں تب  بھی  نیت کو خالص رکھنے کے لحاظ سے بھی یہی بہتر ہے کہ اپنے خیالات کو کسی بھی دوسرے انسان پر ظاہر نہ کریں ، ممکن ہے کہ  آپ کسی سے تعریف چاہتے ہوں ۔ خبردار اس میں ریاکاری کا خطرہ ہے ،کسی سے تعریف نہ چاہیں ، آپ جس کام کو کرنے کا ارادہ کر رہے ہیں اس کا علم اللہ رب العالمین کے پاس محفوظ ہے اور وہی آپ کو اس کا اجر بھی عطا فرمائیں گے ۔

پنجم :::
اگر ترصد کرنے کے لیے کسی ساتھی کی ضرورت ہو تو گنے چنے اور قابل اعتماد ساتھیوں کو اس کام میں شریک کریں اور انہیں بھی نیت خالص رکھنے اور احتیاط کرنے کا مشورہ دیں ۔ لیکن یاد رکھیں کہ ایک کام میں جتنے زیادہ ساتھی شریک ہوتے جاتے ہیں ، نقصان کا خطرہ اسی حد تک بڑھتا جاتا ہے ۔ اس لیے دو افراد کافی ہوں تو تیسرے کو شریک نہ کریں ۔ تین کافی ہوں تو چوتھے کو شریک نہ کریں ۔ خواہ کوئی آپ کا برسوں پرانا جہادی ساتھی کیوں نہ ہو ۔

اس تحریر کی توسط سے ہم ان مجاہدین کو بھی مخاطب کرتے ہیں جو مجرمین کو کیفر کردار تک پہنچانے کے باسعادت کام میں شریک ہیں ۔۔۔ وہ بھی اپنی ضروریات اور تجربات ہم تک پہنچائیں تاکہ اس کی روشنی میں یہ کام ، بہتر سے بہترین بنایا جاسکے ۔

اب ہم آتے ہیں اس طرف کہ وہ کون کون سے اہداف ہیں جن کے افراد یا ادارے مجرمین کی فہرست میں آتے ہیں ::

مجرموں کو ہم چار قسموں میں تقسیم کرسکتے ہیں  ، یہ کہنا مشکل ہے کہ کون سے مجرم بڑے اور کون سے چھوٹے ہیں لیکن یہ فہرست ترجیح کے اعتبار سے ترتیب دی گئی ہے ۔ وقت کے ساتھ ساتھ یہ ترتیب بدل  سکتی ہے لہٰذا اس کو اصولی نہ سمجھا جائے  ۔  بہر حال میڈیا سے مکمل طور پر صرف نظر کیے رکھنے کی بنا پر اس وقت وہ تمام تر قوت گویائی کے ساتھ مجاہدین کو مطعون کرنے کے دجالی مہم میں مصروف کار ہے۔۔۔  لہٰذا فی الحال اس کو  ضرب لگانا زیادہ ضروری ہے ۔۔۔۔

۱۔ میڈیا 
۲۔ سیکیورٹی فورسز 
۳۔ حکومتی ادارے اور افراد
۴۔ غیر حکومتی ادارے ، جیسے سیاسی تنظیمیں اور این جی اوز وغیرہ 



اگلی پوسٹ کے لیے یہاں کلک کریں


واللہ غالب علیٰ امرہ ولکن اکثر الناس لایعلون


دعاؤں کے طلب گار
غزوۃ الہند میں شریک آپ کے مجاہد بھائی

1 تبصرے:

Anonymous said...

جزاک اللہ خیرا کثیرا

تبصرہ کریں

آپ کے مفید مشوروں اور تجاویز کی ضرورت ہے
آپ اپنی شکایات سے بھی آگاہ کر سکتے ہیں
بحثوں میں مخالفت بھی کر سکتے ہیں لیکن حدود و قیود کے ساتھ
جزاک اللہ