Subscribe:

Tuesday, June 14, 2011

لیبیا میں سینکڑوں مسلمان بہنوں کی آبروریزی



نام نہاد مسلم افواج کی بے غیرتیوں اور بے شرمیوں کارنامے پوری دنیا میں پھیلے ہوئے ہیں ۔ یہ کارنامے ان دینی اور مذہبی جماعتوں کے فاسد منہج کے خلاف واضح دلائل بن چکے ہیں جو اقامت دین  اور نفاذ شریعت کے لیے پر امن جمہوری جدوجہد کے قائل ہیں ۔ ایسی ہی ایک دل دہلا دینی والی خبر لیبیا سے بھی موصول ہوئی ہے ۔ جہاں کرنل قذافی کی بدمعاش افواج نے اپنی ہی قوم کی بہنوں اور بیٹیوں کی اجتماعی آبروریزی کر کے اپنے لیے تباہی و بربادی کو لازمی کر لیا ۔ یہ بھی اطلاعات موصول ہوئیں کہ ان ظالموں نے ہماری جوان بہنوں کو سڑکوں پر لا کر ان کے باپوں اور بھائیوں کے سامنے زیادتی کا نشانہ بنایا ۔ اللہ المستعان علینا

ہم اللہ سبحانہ و تعالیٰ سے دعا کرتے ہیں  کہ اللہ تعالیٰ ہماری کمزوریوں کو ان مرتد افواج کے لیے اپنے  مظالم جاری رکھنے کی دلیل نہ بننے دیں ۔۔۔۔ اے اللہ !!! ان بدمعاشوں کو اپنے گرفت میں لے لیں ، انہیں سخت ترین عذاب میں جکڑ لیں ، اور امت مسلمہ کو ہر جگہ ان ظالموں کے ہاتھوں کھلونا بننے سے محفوظ فرما لیں ، اے  مالک  !!! ہماری بہنوں اور بیٹیوں کی عزتوں کو محفوظ رکھیں اور اُن کے بھائیوں کے دلوں میں توحید اور جہاد کی محبت اور پہچان پیدا فرمادیں۔

مجاہدین کے اہل خانہ، جامعہ حفصہ کی طالبات  اور سوات و قبائل کے غیور عوام کی خواتین کے ساتھ زیادتیوں کے متعدد واقعات پاکستان  میں بھی پیش آچکے ہیں اگرچہ وہ اس نوعیت کے نہیں جہاں سڑکوں کے اوپر یا کھلم کھلا ہماری بہنوں کی عزتوں سے کھیلا گیا ہو ۔ ہم اب تک ایسے واقعات پر حکمت کی وجہ سے خاموش بیٹھے رہے ہیں ، لیکن ضرورت محسوس ہوئی تو آئی ایس آئی اور پاکستان آرمی کے درندوں کی کہانیوں کو بھی بے نقاب کریں گے ۔ان شاء اللہ ۔۔

اسْتَحْوَذَ عَلَيْهِمُ الشَّيْطَانُ فَأَنسَاهُمْ ذِكْرَ اللَّـهِ ۚ أُولَـٰئِكَ حِزْبُ الشَّيْطَانِ ۚ أَلَا إِنَّ حِزْبَ الشَّيْطَانِ هُمُ الْخَاسِرُونَ (19)
شیطان اُن پر مسلط ہو چکا ہے اور ا ُس نے خدا کی یاد اُن کے دل سے بھلا دی ہے وہ شیطان کی پارٹی کے لوگ ہیں خبردار ہو، شیطان کی پارٹی والے ہی خسارے میں رہنے والے ہیں ۔

1 تبصرے:

Tausif Hindustani said...

itna sab kuch hone ke baawajood in baadshahi maulviyon ke zubaan se inke khilaaf kuch nahi nikalta , kyonki unhe pata hai yahi kaam unke apne baadshaah bhi kar rahe hain , kahin khul aam kahin chhup kar

تبصرہ کریں

آپ کے مفید مشوروں اور تجاویز کی ضرورت ہے
آپ اپنی شکایات سے بھی آگاہ کر سکتے ہیں
بحثوں میں مخالفت بھی کر سکتے ہیں لیکن حدود و قیود کے ساتھ
جزاک اللہ